Jan 23, 2021 | 3:04 PM

Trend TV

Better Informed Today

فرانس میں مسلمان سڑکوں پر ٗ پولیس سے جھڑپیں

فرانس مسلمانوں کی پولیس کے ساتھ جھڑپیں

پیرس :فرانس میں صدرامانوئیل میکرون حکومت کی جانب سے مسلمانوں کیخلاف سخت قوانین کیخلاف احتجاج کا سلسلہ اب عوام اور پولیس کے درمیان جھڑپوں میں تبدیل ہو چکا ہے۔

تفصیلات کے مطابق مسلمان مظاہرین کی پولیس کے ساتھ جھڑپیں ہوئی ہیں،انھوں نے متعدد کاروں کو نذرآتش کردیا ہے اور دکانوں کی کھڑکیوں کے شیشے توڑ دیے ہیں۔مظاہرین پیرس کے وسط میں واقع ایوان جمہور کی جانب مارچ کررہے تھے اور انھوں نے گیمٹا ایونیو پر واقع ایک سپرمارکیٹ، پراپرٹی ایجنسی اور بنک کے شیشے توڑ دیے ہیں اور وہاں کھڑی متعدد کاروں کو نذرآتش کردیا ہے۔
مظاہرین نے پولیس کی جانب بھی پتھراؤ کیا اور دوسری اشیاء پھینکیں۔اس کے جواب میں پولیس نے مظاہرین کو منتشر کرنے کے لیے اشک آور گیس کے گولے پھینکے ہیں۔فرانسیسی شہری گذشتہ ہفتے سے اس متنازع قانون کے خلاف سراپا احتجاج بنے ہوئے ہیں۔اس سکیورٹی قانون کی ایک دفعہ کے تحت ڈیوٹی پر موجود پولیس اہلکاروں کی تصویریں شائع نہیں کی جاسکیں گی۔

یاد رہے کہ فرانسیسی صدر کی طرف سے ایک سکول ٹیچر کے قتل کے بعد مسلمانوں کیخلاف نئے قوانین لاگو کئے جا رہے ہیں جس پر فرانس میں رہنے والے مسلمان بہت سیخ پا ہیں اور ان قوانین کے خلاف سڑکوں پر نکل آئے ہیں۔